اردو
Saturday 26th of May 2018

دکن میں اردو مرثیہ گوئی کی روایت (حصّہ دوّم )

دو نہروں کے درمیان پر فضا مقام پر مسجد تعمیر کی گئی اسد اللہ الغالب ‘ علی ابن ابی طالب (ع) کے لقب غالب کی رعایت سے نام مسجد غالب تجویز ہوا جس کے عدد بحساب ابجد ۱۰۳۳ ہوتے ہیں مسجد غالب میں اتنی ہی تعداد میں چراغ دان بنوائے گئے تھے۔
حسینی محل‘ عاشور خانہ تھا۔ جہاں محرم میں مجالس عزا برپا ہوتی تھیں خلیل اللہ خان کرمانی کے مقبرہ میں تخت کرمانی لکڑی کا منبر موجود تھا جسے محرم میں رسومات عزا کی ادائیگی کے سلسلہ میں استعمال کیا جاتا تھا۔
پہلے دکھنی مرثیہ نگار آذری کا ذکر صاحب خزانہ عامرہ نے کیا ہے اشرف بیابانی نے ۹ ابواب میں واقعہ کربلا بیان کیا‘ نظم مثنوی کا نام ”نوسرہار“ رکھا۔
عادل شاہ مرثیہ گو شاعر تھا اس کی کلیات میں کئی ایک مراثی موجود ہیں ابراہیم عادل شاہ مرثیہ کہتا تھا اسی کے عہد میں روضتہ الشہداء کا ترجمہ اردو میں ہوا۔
علی عادل شاہ ثانی نے مرثیہ گوئی میں نام پایا۔
مرزا بیچاپوری واحد شاعر ہیں جنہوں نے صرف مراثی سید الشہداء انشا کئے علی عادل شاہ کی فرمائش قصیدہ پر مرزا بیجاپوری نے قصیدہ مدحیہ نہیں لکھا ایک نو تصنیف مرثیہ سلطان کے نام سے منسوب کیا۔ سلاطین بہمنیہ کے دور میں اہل فرقہ و خانقاہ ہی مرثیہ نگاری کی جانب متوجہ ہوئے دوسرے مرثیہ گو شعرا میں۔
نصرتی ‘ شاہ ملک ‘ نادر ‘ ہاشمی شامل ہیں جنہوں نے بیجاپوری مرثیہ گوئی کی روایت مستحکم فرمائی قطب شاہی مملکت میں ایرانی اثر و رسوخ بڑھا گولکنڈہ میں عزاداری اہل بیت کی روایت تہذیبی زندگی کا حصہ ہو گئی۔
محمد قلی قطب شاہ‘ لباس شاہی اتار کرمحرم میں ماتمی لباس پہنتا تھا ملک بھر میں جام وسبو‘ چنگ و رباب کی مناہی ہو جاتی تھی۔
محمد قلی قطب شاہ نے بصرف کثیر بادشاہی عاشور خانہ تعمیر کرائی۔ محمد قلی قطب شاہ اپنے نام کے ساتھ خادم اہل بیت (ع) کے الفاظ لکھنا لکھنوانا پسند کرتا تھا۔
قطب شاہیہ پیشوائے سلطنت میر مومن تھا جو ایام محرم میں شہدائے کربلا ع کے اسمائے گرامی پر علم استادہ کراتا تھا۔ غیر مومن مذہب جعفریہ کی ترویج کے لئے ہمہ وقت درمے‘ قدمے سخنے کوشاں رہتا تھا محمد قلی قطب شاہ‘ کا بھتیجا اور داماد سلطان بنا عزاداری کو اس کے عہد میں ترقی ہوئی۔
محمد قلی قطب شاہ‘ عبد اللہ قطب شاہ‘ قطبی‘ احمد شریف‘ وجہی‘ غواصی‘ عابد‘ فائز‘ محب‘ لطیف‘ شاہی‘ گولکنڈہ والے مرثیہ گو شعرا تھے۔

latest article

  وہابیت کی پیدائش، اس کے اہداف و مقاصد اور نظریات
  تلمود ( یہودیوں کی وحشتناک کتاب)
  ہندو مذہب میں خدا کا تصور و اجتماعی طبقہ بندی
  سیرت رسول اکرم (ص) اور افکار امام خمینی (رہ)
  قرآن کی نظر میں وحدت کا مفہوم
  اسلامی اتحاد کی ترغیب
  اجتماعی روابط کی اصلاح میں ایمان کا کردار
  دينى حكومت اور جمہوريت
  اسلام، امن عالم اوراحترام انسانیت
  سقیفہ کے بعد شیعوں کے سیاسی حالات

user comment

بازدید ترین مطالب سال

انتخاب کوفه به عنوان مقر حکومت امام علی (ع)

داستانى عجيب از برزخ مردگان‏

حکایت خدمت به پدر و مادر

فلسفه نماز چیست و ما چرا نماز می خوانیم؟ (پاسخ ...

سِرِّ نديدن مرده خود در خواب‏

چگونه بفهميم كه خداوند ما را دوست دارد و از ...

رضايت و خشنودي خدا در چیست و چگونه خداوند از ...

سرانجام كسي كه نماز نخواند چه مي شود و مجازات ...

طلبه ای که به لوستر های حرم امیر المومنین ...

شاه کلید آیت الله نخودکی برای یک جوان!

پر بازدید ترین مطالب ماه

حاجت خود را جز نزد سه نفر نگو!!

فضیلت ماه مبارک رمضان

عظمت آية الكرسی (1)  

مرگ و عالم آخرت

با این کلید، ثروتمند شوید!!

منظور از ولایت فقیه چیست ؟

ماه رمضان، ماه توبه‏

ذکری برای رهایی از سختی ها و بلاها

آيا فكر گناه كردن هم گناه محسوب مي گردد، عواقب ...

رفع گرفتاری با توسل به امام رضا (ع)

پر بازدید ترین مطالب روز

تنها گناه نابخشودنی

نجات یک جوان مست با دعای ندبه

موضوعات اخلاقی - جلسه دهم - خدیجه سلام الله ...

داستان شگفت انگيز سعد بن معاذ

مطالب ناب استاد انصاریان در «سروش»، «ایتا»، ...

راه ترک خودارضایی ( استمنا ) چیست؟

نعمت‌ هایی که جایگزینی براي آن‌ ها نیست.

چند روايت عجيب در مورد پدر و مادر

تقيه چيست و انجام آن در چه مواردي لازم است؟

اعلام برنامه سخنرانی استاد انصاریان در ماه ...